مقبوضہ فلسطین

فلسطین میں کورونا کے 439 نئےمریضوں کی تصدیق، غرب اردن میں مکمل لاک ڈاؤن

شیعت نیوز : فلسطین میں کورونا سےغرب اردن اور القدس میں گذشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران مزید 439  کیسز کی تصدیق کی گئی ہے جب کہ گذشتہ روز مزید چھ مریض اس وبا سے چل بسے۔

فلسطینی وزارت صحت کے بیان میں کہا گیا ہے کہ گذشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران کورونا کے مزید چھ مریض ہلاک ہوگئے۔ 179 صحت یاب ہوئے ہیں جن میں سے 174 الخلیل اور پانچ غزہ کی پٹی سے تعلق رکھتے ہیں۔

فلسطینی اسپتالوں میں اس وقت 16 شہریوں کی کورونا کی وجہ سے حالت تشویشناک ہے جبکہ پانچ مریض وینٹی لیٹر پر ہیں۔

مجموعی طور پر گذشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران 4246 افراد کے کورونا ٹیسٹ لیے گئے۔ اسپتالوں میں زیرعلاج 7 ہزار 334 مریضوں کی حالت خطرے سے باہر ہے جب کہ 1666 صحت یاب ہوئے ہیں۔ فلسطین میں کورونا سے اب تک مجموعی طور پر 55 افراد جاں بحق ہوئے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں : غزہ میں امریکی و صیہونی نواز سعودی ٹیلی ویژن چینلوں کی نشریات پر پابندی

دوسری جانب فلسطین کے مقبوضہ مغربی کنارے کے علاقوں میں کورونا کی وبا کے تیزی سے پھیلائو کے بعد وزیراعظم محمد اشتیہ نے تمام شہروں میں لاک ڈاؤن کا فیصلہ کیا ہے۔

رپورٹ کے مطابق وزیراعظم کے اعلان کے بعد غرب اردن کی تمام گورنریوں میں کل جمعہ سے لاک ڈاؤن لگا دیا گیا۔ لاک ڈاؤن اتوار کی صبح تک جاری رہے گا۔

لاک ڈاؤن کے دوران بیکریوں، کریانہ کی دکانوں اور ڈسپنسریوں کے علاوہ دیگر تمام کاروباری سرگرمیاں بند ہوں گی اور سڑکوں پر ہنگامی نوعیت کی ٹریفک کو چلنے کی اجازت ہوگی۔

حکومتی فیصلے کے مطابق لاک ڈاؤن کا اطلاق غرب اردن کے تمام شہروں، دیہاتوں اور پناہ گزین کیمپوں میں ہوگا۔لاک ڈاؤن پرعمل درآمد کے لیے فلسطینی اتھارٹی نے پولیس کو الرٹ کردیا ہے۔

خیال رہے کہ فلسطین کے مقبوضہ مغربی کنارے کے جنوبی شہر الخلیل اور کئی دوسرے علاقوں میں کورونا وائرس کے کیسز کی بڑی تعداد سامنے آئی ہے۔

ٹیگز

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close