اہم ترین خبریںایران

جنرل قاسم سلیمانی کی ٹارگٹ کلنگ پر امریکا اور داعش کے سوا کوئی خوش نہیں، جوادظریف

ایرانی وزیر خارجہ محمد جواد ظریف نے کہا کہ جب کوئی نادان شخص گستاخ ہو جائے تو پھر بڑے بڑے حادثات رونما ہوتے ہیں

شیعت نیوز: ایرانی وزیر خارجہ محمد جوادظریف نے بھارت کے شہر نئی دہلی میں ہونیوالی رائیسینا ڈائیلاگ کانفرنس 2020ء سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ حالیہ واقعات میں ہمارے خطے کے حوالے سے امریکہ کی انتہائی پریشان کن سوچ ابھر کر سامنے آئی ہے جسکے حوالے سے سب سے پہلی بات تو یہ ہے کہ وہ ہر چیز کو بجائے خطے کی عوام کے زاویۂ نگاہ سے دیکھنے کے، صرف اپنے ہی نکتۂ نظر سے دیکھتے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں: امریکہ نے 25برس کے دوران 9 مسلم ممالک کو راکھ کا ڈھیر بنایا اور ایک کروڑ دس لاکھ مسلمان شہید کیے ،علامہ اقتدارنقوی

محمد جوادظریف نے جنرل قاسم سلیمانی کو شہادت سے ہمکنار کرنے کی امریکی دہشتگردانہ کارروائی کیطرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ جب انہوں نے ہمارے ایک انتہائی قابل احترام سپہ سالار کو عراقی سرزمین پر ٹارگٹ کلنگ کا نشانہ بناتے ہوئے عراقی خودمختاری کی دھجیاں اڑا دیں تو امریکی وزیر خارجہ نے حقیقت کو توڑ مروڑ کر پیش کرتے ہوئے، اپنے پیغام میں کسی چھوٹے سے عراقی گروہ کی ویڈیو لگائی اور لکھا کہ ہم نے خطے کو (جنرل قاسم سلیمانی سے) نجات دلوا دی ہے جس پر لوگ خوشیاں منا رہے ہیں، جبکہ یہ چیز 2 باتوں کو ظاہر کرتی ہے جو خطرناک ہیں اور جب آپس میں اکٹھی ہو جائیں تو انتہائی خطرناک ہو جائیں گی یعنی: نادانی اور گستاخی۔

یہ بھی پڑھیں: ملی یکجہتی کونسل پاکستان کا وفد لیاقت بلوچ کی سربراہی میں مشہد مقدس پہنچ گیا

ایرانی وزیر خارجہ محمد جوادظریف نے کہا کہ جب کوئی نادان شخص گستاخ ہو جائے تو پھر بڑے بڑے حادثات رونما ہوتے ہیں خاص طور پر تب جب بہت زیادہ طاقت بھی اسکے اختیار میں ہو۔ انہوں نے کہا کہ یہی عوامل ہیں جو ہمارے خطے میں ہرج و مرج کا موجب بنے ہیں۔ ایرانی وزیر خارجہ نے کہا کہ جنرل قاسم سلیمانی داعش کیخلاف مقابلے میں تنہاء موثر قوت تھے جبکہ انکی ٹارگٹ کلنگ سے ٹرمپ اور داعش کے علاوہ کوئی خوش نہیں ہوا جبکہ صرف بھارت میں ہی 430 عوامی مقامات پر انکے لئے سوگ منایا گیا ہے۔

ٹیگز
Show More

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close