پاکستان

کوئٹہ: 24 خطرناک تکفیری قیدیوں کو مچھ جیل منتقل

کوئٹہ: ڈسٹرکٹ جیل کوئٹہ پر حملے کے ممکنہ خطرے کے پیش نظر 24 ہائی پروفائل قیدیوں کو سینٹرل جیل مچھ منتقل کردیا گیا ہے۔

بلوچستان کے محکمہ داخلہ و قبائلی امور کے ایک اجلاس میں قیدیوں کی منتقلی کا فیصلہ کیا گیا۔

اجلاس میں صوبائی محکمہ داخلہ اور محکمہ جیل خانہ جات کے سینیئر افسران کے مابین صوبے کی جیلوں پر دہشت گردوں کے ممکنہ حملوں کے معاملات زیرِ بحث آئے۔

ڈسٹرکٹ جیل کوئٹہ کے سپرنٹنڈنٹ محمد آصف بٹ نے بتایا کہ 24 ہائی پروفائل قیدیوں کو انتہائی سخت حفاظتی انتظامات میں سینٹرل جیل مچھ منتقل کردیا گیا ہے۔

انھوں نے کہا کہ قیدیوں کی منتقلی کے دوران کسی بھی ناخوشگوار واقعے سے بچنے کے لیے فرنٹیئر کور (ایف سی)، بلوچستان کانسٹیبلری، پولیس اور ریپڈ رسپانس فورس کے اہلکاروں کو جیل کے اطراف تعینات کیا گیا تھا۔

آصف بٹ کے مطابق منتقل کیے گئے تمام قیدیوں کو سزائے موت دی جا چکی ہے۔

واضح رہے کہ کل 97 قیدیوں کو پھانسی کی سزا سنائی گئی ہے، جن میں سے 14 نے صدر مملکت ممنون حسین سے رحم کی اپیل کی تھی۔

محکمہ داخلہ کے ایک افسر نے ڈان نیوز کو بتایا کہ ان مجرموں کی قمست کا فیصلہ کچھ دن میں ہو جائے گا۔

بلوچستان کی تمام 11 جیلوں میں موجود قیدیوں کی تعداد 3 ہزار سے زائد ہے، جبکہ ذرائع کے مطابق ڈسٹرکٹ جیل کوئٹہ، خضدار، گڈانی اور مچھ جیل کو حساس قرار دیا گیا ہے۔

سانحہ پشاور کے تناطر میں سزائے موت ہپر پابندی اٹھائے جانے کے بعد بلوچستان سمیت ملک بھر کی جیلوں کی سیکیورٹی بھی سخت کردی گئی ہے۔

ٹیگز
Show More

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close