اہم ترین خبریںیمن

سعودی عرب کی تازہ جارحیت،21 یمنی شہری شہید و زخمی

شیعت نیوز : یمن پر سعودی عرب کی تازہ ترین جارحیت کے نتیجے میں کم از کم اکیس یمنی شہری شہید و زخمی ہو گئے۔

المسیرہ ٹیلی ویژن چینل کے مطابق سعودی عرب اور اس کے اتحادیوں نے گزشتہ روز یمن کے مختلف علاقوں پر تابڑ توڑ حملے کئے۔ مذکورہ چینل نے یمن کی وزارت صحت کے حوالے سے بتایا ہے کہ الجوف صوبے کے المعاطرہ علاقے پر جارح سعودی اتحاد کے صرف ایک حملے میں نو یمنی شہید اور بارہ زخمی ہو گئے۔

یمنی ذرائع کے مطابق شہید ہونے والوں میں زيادہ تر تعداد بچوں اور خواتین کی ہے۔ یمن کے مظلوم اور نہتے مسلمانوں پر ایک طرف سعودی عرب کے بہیمانہ اور مجرمانہ ہوائی حملوں کا سلسلہ جاری ہے اور دوسری طرف عالمی برادری اور انسانی حقوق کے عالمی اداروں کی خاموشی بھی جاری ہے۔

یہ بھی پڑھیں : حشد الشعبی کا صوبہ نینوا میں داعشی دہشت گردوں کے خلاف وسیع آپریشن

اس سے قبل جون کے مہینے میں بھی سعودی جنگی طیاروں نے صوبہ جوف کے الحزم شہر میں ایک شادی کی تقریب پر بمباری کر دی تھی جس کے نتیجے میں پینتیس یمنی شہری شہید ہو گئے تھے۔ یہ حملہ اس قدر دردناک تھا کہ یمنی قبائل نے اسکے بعد سعودی دشمن سے انتقام لینے کا عہد کیا تھا۔

مئی میں جنگ بندی معاہدے کے اختتام کے بعد سے بھکمری و بیماری سے تنگ آ چکے یمن پر آل سعود اور اس کے اتحادیوں کے حملوں میں مزید شدت آ گئی ہے اور ملک میں کورونا کی پھیلاؤ کے باوجود ان کے وحشیانہ حملے جاری ہیں۔

خیال رہے کہ یمن کو مارچ دوہزار پندرہ سے مغربی و یورپی ممالک کے حمایت یافتہ سعودی اتحاد کی سمندری فضائی اور زمینی جارحیت کا سامنا ہے جس کے سبب ملک کا تمام انفرااسٹرکچر تباہ ہو کر رہ گیا ہے اور دسیوں لاکھ یمنیوں کو بے پناہ مصائب و آلام اور ناگفتہ بہ مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔ اب تک دسیوں ہزار یمنی شہری شہید و زخمی ہو چکے ہیں۔

ٹیگز

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close