یمن

سعودی اتحاد اور یمنی افواج کے درمیان جھڑپیں جاری، سعودی ڈرون طیارہ مار گرایا

شیعت نیوز: یمن کی قومی سالویشن حکومت کے ایک فوجی ذریعے نے بحیرہ احمر کے سواحل پر واقع صوبے الحدیدہ کی فضا میں سعودی اتحاد کا ایک جاسوس ڈرون طیارہ مار گرائے جانے کی خبر دی ہے۔

المیادین ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق صنعا حکومت کے ایک فوجی ذریعے نے کہا ہے کہ یمنی فوج اور عوامی رضاکار فورس کے اینٹی ایئرکرافٹ یونٹ نے یمن کے مغربی صوبے الحدیدہ میں سعودی اتحاد کا ایک ڈرون طیارہ مار گرایا ہے۔اس ذریعے کے مطابق سعودی اتحاد کے فوجیوں نے یمنی فوج اور عوامی رضاکار فورس کے زیر کنٹرول علاقوں پر شدید گولہ باری کی جبکہ الحدیدہ کے التحیتا، حیس اور الفازہ علاقوں کی فضا میں سعودی اتحاد کے جنگی اور ڈرون طیاروں نے پروازیں بھی کیں۔

رپورٹ کے مطابق سعودی اتحاد کے جنگی طیاروں نے سعودی عرب کی نجران سرحد سے ملے یمن کے صوبے الجوف کے مختلف علاقوں منجملہ خب الشعف کے علاقے المرازیق پر بمباری کی۔

یہ بھی پڑھیں : امام خمینی نے فلسطینی استقامت کے جسم میں روح پھونکی۔ سربراہ اسماعیل ہنیہ

سعودی عرب کے جنگی طیاروں نے صوبہ صعدہ کے مختلف علاقوں پر وحشیانہ بمباری کی ۔ سعودی عرب کے جنگی طیاروں نے صعدہ کے رازح علاقہ پر سب سے زیادہ حملے کئے ہیں۔

سعودی اتحاد کے طیاروں نے صوبہ الحدیدہ کے الدریہمی علاقہ پر بھی شدید بمباری کی ہے۔ سعودی عرب کے ان حملوں میں متعدد روزہ دار یمنی شہید اور زخمی ہوئے ہیں۔

سعودی اتحاد کے جنگی طیاروں نے صوبے مآرب کے صرواح اور مجزر علاقوں کو بھی جارحیت کا نشانہ بنایا۔ صرواح اور مجزر میں صنعا حکومت کے فوجیوں اور منصور ہادی کے فوجیوں کے درمیان شدید جنگ بھی ہو رہی ہے۔

صوبے البیضا کے شمال مشرقی علاقے قانیہ میں بھی فریقین کے درمیان شدید جنگ جاری ہے اور سعودی اتحاد کے جنگی طیاروں نے یمنی فوج اور عوامی رضاکار فورس کے ٹھکانوں پر کئی بار بمباری کی ہے تاکہ ان ٹھکانوں کی طرف مفرور و مستعفی صدر منصور ہادی کے فوجیوں کی پیش قدمی میں مدد مل سکے۔

 

ٹیگز
Show More

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close