مقبوضہ فلسطین

سعودی ٹی وی چینل العربیہ اسرائیلی پالیسیوں کی سمت گامزن ہے۔ حماس

شیعت نیوز : فلسطین کی اسلامی تحریک مزاحمت حماس نے کہا ہے کہ سعودی ٹی وی چینل العربیہ کا پروپیگنڈہ جھوٹے اور غلط الزامات پر مبنی ہے اور وہ خطے میں اسرائیلی پالیسیوں کو فروغ دے رہا ہے اور اس چینل کی پالیسیاں اسرائیلی پالیسیوں کے ساتھ ہم آہنگ ہیں۔

فلسطینی تنظیم حماس نے ایک بیان میں کہا ہے کہ سعودی عرب کے ٹی وی چینل العربیہ کی پالیسیاں اسرائیلی پالیسیوں کے ساتھ ہم آہنگ ہیں۔

یہ بھی پڑھیں : انصار اللہ یمن اسرائیل پر میزائل یا ڈرون حملہ کر سکتی ہے، عرب اخبار

صفا خبررساں ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق فلسطین کی اسلامی مزاحمتی تنظیم حماس نے ایک بیان میں فلسطینیوں کے خلاف العربیہ اور بعض دیگر عرب ذرائع ابلاغ کے پروپیگنڈے کی مذمت کی ہے۔

حماس نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ سعودی عرب کے ٹی وی چینل العربیہ کا مقصد فلسطینی مزاحمت کو کمزور بنانا اور نقصان پہنچانا ہے اور ہم العربیہ کی طرف سے اسرائیل کے ساتھ ہم آہنگی کرنے کے اقدام کی بھر پور الفاظ میں مذمت کرتے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں : اقوام متحدہ کے خصوصی رپورٹر کی امریکی صدر پر کڑی نکتہ چینی

چند روز قبل بھی غزہ کے داخلی امور کی وزارت نے سعودی عرب کے ٹیلی ویژن چینل العربیہ کے دعوے کو مسترد کرتے ہوئے کہا تھا کہ العربیہ ٹیلی ویژن چینل سعودی آلہ کار کے طور پر کام کر کے رائے عامہ کو گمراہ کرنے کیلئے غلط اور جھوٹ پر مبنی پروپگنڈہ کرتا ہے۔

فلسطین کی سیاسی اور ثقافتی شخصیات نے متعدد بارالعربیہ ٹیلی ویژن چینل کے اسرائیل کے ساتھ ہم آواز ہونے پر کڑی نکتہ چینی کی۔

واضح رہے کہ العربیہ ٹیلی ویژن چینل نے حماس اور القسام بریگیڈ کے خلاف زہریلا پروپیگںڈہ شروع کر رکھا ہے اور اس طرح وہ خطے میں امریکی اور اسرائیلی مفادات کو تحفظ فراہم کرنے کی پالیسی پر گامزن ہے۔

ٹیگز

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close