مشرق وسطی

شام: الرقہ شہر میں سلسلہ وار تین بم دھماکے، 30 تکفیری دہشتگرد ہلاک

شیعت نیوز : شامی ذرائع کا کہنا ہے کہ الرقہ شہر میں یکے بعد دیگرے تین بم دھماکے ہوئے ہیں اور لاذقیہ کے مضافات میں دہشت گرد گروہ النصرہ فرنٹ کے بھاری ہتھیاروں سے حملہ ناکام بنا دیا گیا ہے۔

رپورٹ کے مطابق نورس پریس نے خبر دی ہے کہ گزشتہ رات الرقہ شہر میں سلسلہ وار تین بم دھماکے ہوئے جس کے نتیجے میں متعدد افراد جاں بحق یا زخمی ہوگئے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں : پنجگور میں سیکورٹی فورسز کے قافلے پر فائرنگ، 3 جوان شہید

بعض ذرائع کا کہنا ہے کہ تینوں بم دھماکے’’صوتی‘‘ تھے اور دھماکوں میں کسی قسم کے جانی اورمالی نقصانات نہیں ہوئے ہیں کیونکہ دہشت گردوں کا مقصد عوام میں خوف ہراس پھیلانا تھا۔

دوسری طرف لاذقیہ سے خبر ہے کہ دہشت گرد گروہ النصرہ فرنٹ نے مختلف علاقوں پر راکٹ حملے کئے اور سرکاری فوج نے دہشت گردوں کے تمام ترحملوں کو ناکام بناتے ہوئےالنصرہ فرنٹ کے متعدد شرپسندوں کو ہلاک یا زخمی کردیا۔

یہ بھی پڑھیں : نیتن یاہو کے گھر کے باہر ہزاروں اسرائیلیوں کا احتجاج ،استعفے کا مطالبہ زورپکڑگیا

منگل کے روز روسی گشت پر حملے کے ذمہ دار دہشت گرد گروپوں کے مقامات، ہیڈ کوارٹرز اور میکانزم پر روسی اور شامی فورسز نے متعدد حملے کیے جس میں 30 کے قریب تکفیری دہشت گرد ہلاک ہو گئے ہیں ۔

ادلیب کی ایک فیلڈ رپورٹ کے مطابق ، شامی عرب فوج (SAA) نے روسی جاسوس طیاروں کی مدد سے ، شمال مغربی شام کے اس گورنریٹ کے اندر متعدد مقامات پر تکفیری دہشت گردوں کے ٹھکانوں پر شدید حملہ کیا۔

فیلڈ رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ شام کی زمینی اور فضائی فوجوں نے خاص طور پر حیات تحریر الشام (ایچ ٹی ایس) اور ترکستان اسلامی پارٹی (ٹی آئی پی) کے شہروں اریحہ ، بینن اور البارع شہروں کو نشانہ بنایا جس میں 30 دہشت گرد ہلاک ہو گئے ہیں۔

ٹیگز

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close