اہم ترین خبریںمشرق وسطی

شام کی سرکاری فوج صوبہ ادلب کے اہم شہروں میں داخل ہو گئی

شیعت نیوز: شامی ذرائع کا کہنا ہے کہ ادلب میں تکفیری دہشت گردوں کے خلاف آپریشن میں سرکاری فوج کی پیشقدمی جاری ہے۔ سرکاری فوج نے ادلب کے متعدد اسٹریٹجیک علاقوں کو تکفیری دہشت گردوں سے آزاد کرالیا ہے۔

سانا نیوز نے خبر دی ہے کہ شامی فوج نے ادلب کے مضافاتی علاقے میں امریکہ اور اسرائیل کے حمایت یافتہ دہشت گردوں کے خلاف اہم کامیابی حاصل کی ہے اور معرہ النعمان نامی علاقے کو آزاد کرالیا ہے۔

یہ بھی پڑھیں : شام میں اسرائیلی میزائل حملوں میں اسلامی جہاد کے دو کمانڈر شہید

تفصیلات کے مطابق شامی فوج اور عوامی رضاکار فورسز کے جوانوں نے ادلب کے مضافات میں معرتماتر اورمعرتصین نامی دیہاتوں کو بھی مکمل طور پر آزد کرالیا ہے اور کفرنبل نامی شہرکی طرف پیشقدمی جاری ہے۔

شامی ذرائع کا کہنا ہے کہ ترک حمایت یافتہ درجنوں دہشت گردوں نے پیرکی شام کو ادلب کے مشرقی علاقے النیرب پر قبضہ کرلیا تھا، اب فوج نے مکمل طور پر دوبارہ آزاد کرالیا ہے۔

شام میں ادلب کو آزاد کرانے کے لئے شامی فوج کی پیشقدمی کا سلسلہ جاری ہے اور شامی فوج ادلب کے اہم شہر کفرنبل میں داخل ہو گئی ہے۔

یہ بھی پڑھیں : شام کے صوبہ ادلب کے اطراف میں روسی جنگی طیاروں کی شدید بمباری

شام میں انصارالتوحید اور جبھہ النصرہ کے سینکڑوں دہشت گرد کل رات ادلب کے جنوب میں واقع اہم شہر کفرنبل سے الزاویہ کی جانب فرار کر گئے۔ شام کی فوج بدستور حاس کی جانب پیشقدمی کر رہی ہے جو کفر نبل کا دروازہ سمجھا جاتا ہے۔

اس سے قبل شام کی فوج نے ادلب کے علاقوں شیخ دامس اور حنتوتین کو دہشت گردوں کے چنگل سے آزاد کرایا جس کے دوران درجنوں دہشت گرد ہلاک ہوئے۔

ٹیگز
Show More

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close