اہم ترین خبریںایران

صیہونی حکومت کو اپنے جارحانہ اقدامات کے نتائج کو قبول کرنا ہوگا

شیعت نیوز : ایران کی حکومت کے ترجمان نے شام ، لبنان اور عراق پر صیہونی حکومت کی جارحیتوں کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ صیہونی حکومت کو اپنے جارحانہ اقدامات کے نتائج کو قبول کرنا ہوگا۔

ایران کی حکومت کے ترجمان علی ربیعی نے پیر کو ایک پریس کانفرنس میں اس بات کا ذکرکرتے ہوئے کہ صیہونی حکومت کو علاقے کے عوام کے صبر و تحمل سے غلط فائدہ نہیں اُٹھانا چاہئے کہا کہ عراق ، شام اور لبنان کے عوام کے جائز دفاع کے حق کی ایران حمایت کرتا ہے۔

یہ بھی پڑھیں : حزب اللہ، غاصب صیہونی حکومت کے مقابلے میں ایک دفاعی طاقت ہے سید حسن نصراللہ

انہوں نے حزب اللہ کے سربراہ سید حسن نصراللہ کی جانب سے صیہونی حکومت کو دئے گئے انتباہ کو جارح قوتوں کے لئے واضح اور ٹھوس پیغام قراردیا اور کہا کہ صیہونی حکومت نے گذشتہ مہینوں کے دوران گستاخانہ انداز میں بین الاقوامی قوانین کی خلاف ورزی کی ہے۔

ایران کی حکومت کے ترجمان نے عراق کی عوامی رضاکارفورس الحشد الشعبی کے اڈوں پر صیہونی حکومت کے ڈرون حملوں کے بار ے میں بھی کہا کہ ایران صیہونی حکومت کی جارحیتوں کا مقابلہ کرنے کے لئے عراقی عوام اور حکومت کی کسی بھی طرح کی مدد کرنے سے دریغ نہیں کرے گا۔

انہوں نے ایرانی آئل ٹینکر گریس ون کے بارے میں کہا کہ ایران نے اس آئل ٹینکر کو فروخت کردیا ہے اور اب خود اس آئل ٹینکر کا مالک اور تیل کا خریدار یہ فیصلہ کرے گا کہ یہ آئل ٹینکر کہاں تیل کی کھیپ لے کر جائے گا۔

ایرانی حکومت کے ترجمان نے وزیر خارجہ ڈاکٹر جواد ظریف کے اتوار کے روز کے دورہ فرانس کی جانب بھی اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ ڈاکٹر جواد ظریف کے دورہ فرانس کا گروپ سات کے سربراہی اجلاس سے کوئی تعلق نہیں تھا بلکہ یہ دورہ فرانس کی دعوت پر انجام پایا تھا ۔ان کا کہنا تھا کہ ایرانی حکام کا امریکی عہدیداروں سے ملاقات کا کوئی ارادہ نہیں ہے۔

ٹیگز
Show More

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close