پاکستان

عمران حکومت نے عزاداری کے راہ میں رکاوٹیں ڈالنے کے تمام سابقہ رکارڈ توڑ ڈالے ہیں،علامہ سبطین سبزواری

انہوں نے کہا کہ عزاداری ہمارا بنیادی حق ہے، عزاداری کے سیدالشہدا منانے میں کسی قسم کی رکاوٹ کو برداشت نہیں کریں گے، شورٹی بانڈز لینے اور ناجائز مقدمات کو واپس لیا جائے

شیعت نیوز: شیعہ علماء کونسل شمالی پنجاب کے صدر علامہ سید سبطین حیدر سبزواری نے کہا ہے کہ عمران حکومت نے عزاداری سید الشہداء کے انعقاد میں رکاوٹیں پیدا کرنے کا سابقہ حکومتوں کے ظالمانہ ریکارڈ توڑ دئیے ہیں۔ حافظ آباد، جہلم، مرید کے، کامونکی، شیخوپورہ، فتح جنگ اٹک میں پولیس نے گھروں کی چاردیواری کے اندر ہونے والی مجالس کو اجازت کے من گھڑت جواز کے تحت چادر اور چاردیواری کا تقدس پامال کیا اور دھمکیاں دے رہی ہے کہ بانیان مجالس کو فورتھ شیڈول میں ڈال کر 16 ایم پی او کے تحت مقدمات درج کئے جائیں گے۔

صوبائی سینیر نائب صدر ساجد حسین نقوی سے گفتگو میں علامہ سبطین سبزواری نے مجالس عزا میں رکاوٹوں کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہم پولیس کے غیر قانونی اقدامات کو مسترد کرتے ہیں اور اسے عوام میں اشتعال پیدا کرنے کی سازش سمجھتے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں: عزاداری امام حسین ؑکے خلاف عثمان بزدارحکومت شہباز شریف حکومت کے نقش قدم پر

انہوں نے کہا کہ عزاداری ہمارا بنیادی حق ہے، عزاداری کے سیدالشہدا منانے میں کسی قسم کی رکاوٹ کو برداشت نہیں کریں گے، شورٹی بانڈز لینے اور ناجائز مقدمات کو واپس لیا جائے۔ ہم عزاداری کیلئے کسی قسم کی اجازت لینے کے جواز کو مسترد کرتے ہیں اور واضح کرتے ہیں کہ مجالس اور جلوسوں کو ماضی کی متعدد یزیدی قوتیں ختم کرنے میں ناکام رہیں تو آج کے حکمرانوں کو بھی ناپاک جسارت کی اجازت نہیں دیں گے۔

انہوں نے کہا کہ ضیاءالحق کے مارشل لا نے بڑی کوشش کی اور اس نے اپنے پالتو تکفیری دہشتگرد گروہ بھی پیدا کیے لیکن عزاداری کو کوئی نہیں روک سکا کیونکہ جو قوم قربانیاں دینا جانتی ہے اسے دبایا نہیں جا سکتا۔ علامہ سبطین سبزواری نے کہا کہ حکومت ہوش کے ناخن لے، مجالس اور جلوسوں میں رکاوٹیں پید ا نہ کرے ورنہ دھرنوں سمیت مختلف صرف اقدامات پر غور کیا جا رہا ہے۔

ٹیگز
Show More

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close