اہم ترین خبریںپاکستان

علامہ شہنشاہ نقوی نے چیف سیکریٹری داخلہ سندھ کی برطرفی تک مجلس عزا سے خطاب نہ کرنے کا اعلان کردیا

شیعت نیوز: سندھ حکومت کی عزاداری سے دشمنی، نامور عالم دین خطیب نشتر پارک کراچی علامہ سید شہنشاہ حسین نقوی پر سندھ میں مجالس پڑھنے پر پابندی عائد کردی، علامہ شہنشاہ نقوی کا سیکریٹری داخلہ ڈاکٹر عثمان چاچڑ کی معطلی تک مجالس عزا سے خطاب نہ کرنے کا اعلان۔

تفصیلات کے خود کو مولائیوں کی جماعت قرار دینے والی پاکستان پیپلز پارٹی کی سندھ حکومت کا ایک اور شدید متعصبانہ اقدام سامنے آگیا ہے، سندھ حکومت نے بین الاقوامی شہرت یافتہ اور انتہائی قابل احترام شیعہ عالم دین داعی اتحاد بین المسلمین علامہ شہنشاہ حسین نقوی پر سندھ بھر میں مجالس عزا سے خطاب پر پابندی عائد کردی ہے۔

یہ خبر بھی پڑھیں ننھی عزادار مظلوم کربلاشہیدہ غمشیرہ بتول تاریخ شہادت: ۳ محرم ۱۳۳۶ھ بمطابق : ۲۸ اکتوبر ۲۰۱۴

سندھ حکومت کی جانب سے اس متعصبانہ اقدام کے بعد علامہ شہنشاہ حسین نقوی نے تھوڑی دیر قبل نشتر پارک میں منعقدہ مرکزی عشرہ محرم الحرام کی تیسری مجلس عزا سے خطاب کے دوران کہا کہ سیکریٹری داخلہ سندھ ڈاکٹر عثمان چاچڑ کی برطرفی تک میں نشتر پارک کے عشرہ مجالس عزا سے خطاب نہیں کروں گا۔

علامہ شہنشاہ نقوی کے اس اعلان کے بعد عزاداروں نے لبیک یاحسین ع کےفلک شگاف نعرے لگائے

واضح رہے کہ علامہ شہنشاہ حسین نقوی نے ہمیشہ منبر و محراب سے شیعہ سنی اتحاد کا پیغا م دیا ہے، ان کے سامعین میں شیعوں کے بعسے زیادہ تعداد اہل سنت عوام کی ہوتی ہے۔ سندھ حکومت کے اس اودام سے ملت جعفریہ میں شدید اشتعال پایا جاتا ہے، آصف علی زرداری اور بلاول زرداری سندھ حکومت کے اس متعصبانہ اقدام کا فوری فوری نوٹس لیں۔

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close