پاکستان

تکفیری مولوی ریاض بسرا مسجد میں معصوم بچی کیساتھ زیادتی کرتے ہوئے رنگے ہاتھوں گرفتار

مولوی ریاض بسرا مقامی مسجد میں 10 سالہ بچی کیساتھ زیادتی کرتے ہوئے پکڑا گیا

شیعت نیوز : تکفیری مولوی ریاض بسرا بستی محمد آباد کی مقامی مسجد میں قرآن پاک کی تعلیم حاصل کرنے کے لئے آنے والی 10 سالہ معصوم بچی سے زیادتی کرتے ہوئے اہل محلہ کے ہاتھوں رنگے ہاتھوں پکڑا گیا۔ مولوی ریاض بسرا کالعدم سپاہ صحابہ ضلع ٹوبہ ٹیک سنگھ کا ضلعی صدر بھی ہے۔

اطلاعات کے مطابق ضلع ٹوبہ ٹیک سنگھ کی تحصیل سندیلیانوالی کی نواہی بستی محمد آباد میں تکفیری مولوی ریاض بسرا علاقے کی مسجد میں 10 سالہ معصوم بچی کے ساتھ زیادتی کرتے ہوئے پکڑا گیا۔اہل علاقہ نے مولوی ریاض بسرا کو تشدد کے بعد پولیس کے حوالے کر دیا۔پولیس کے مطابق گرفتار مولوی ریاض بسرا کالعدم سپاہ صحابہ ضلع ٹوبہ ٹیک سنگھ کا ضلعی صدر بھی ہے۔ پولیس نے مولوی ریاض بسرا کو حراست میں لینے کے بعد اس کا طبعی معائنہ کروانے کے لئے اسے سخت سیکیورٹی میں اسپتال منتقل کر دیا۔

یہ بھی پڑھیں :جامعہ عثمان بن عفان کے تکفیری ملاں نے ایک 10 سالہ یتیم بچی کو اپنی جنسی درندگی کا نشانہ بنا ڈالا

زرائع کے مطابق کالعدم سپاہ صحابہ ضلع ٹوبہ ٹیک سنگھ کے گرفتار صدر مولوی ریاض بسرا کے حوالے سے اہل محلہ کو پہلے بھی معصوم بچوں کے ساتھ زیادتی کی شکایات موصول ہوتی رہی تھیں، لیکن اہل علاقہ نے ان شکایات کو مخالف فرقے کی جانب سے مولوی ریاض بسرا کا تعلق کالعدم سپاہ صحابہ سے ہونے کی بنیاد پر الزام تراشی گردانتے ہوئے تکفیری مولوی کے خلاف کوئی کاروائی نھیں کی۔پولیس کے مطابق گرفتار تکفیری مولوی چند سال قبل پنڈ غازی آباد کی مسجد میں بھی مسجد کے ایک خدمتگار کے بیٹے کے ساتھ زیادی کرتے ہوئے پکڑا گیا تھا،جس پر مولوی ریاض بسرا کو معافی تلافی کے بعد پنڈ غاذی آباد سے نکال دیا گیا تھا۔

ٹیگز
Show More

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close