مقبوضہ فلسطین

اقوام متحدہ بچوں کے خلاف صیہونی جرائم کا نوٹس لے۔ فلسطین

شیعت نیوز : اقوام متحدہ میں فلسطین کے مستقل نمائندے ریاض منصور نے اقوام متحدہ سے مطالبہ کیا ہے کہ بچوں کے خلاف صیہونی جرائم کی بناء پر اسرائیل کو ’’بچوں کے حقوق پائمال کرنے والی حکومتوں کی فہرست‘‘ میں شامل کیا جائے۔

عرب اخبار القدس العربی کے مطابق ’’مسلح لڑائیوں میں بچوں کی صورتحال‘‘ کے عنوان سے منعقد ہونے والے سلامتی کونسل کے ویڈیو اجلاس میں ریاض منصور نے اپنا بیان ریکارڈ کرواتے ہوئے اس بات پر گہری تشویش کا اظہار کیا کہ اسرائیل کو تاحال ’’بچوں کے حقوق پائمال کرنے والی حکومتوں کی فہرست‘‘ میں شامل کیوں نہیں کیا گیا۔

انہوں نے کہا کہ اسرائیل کو بلیک لسٹ کرنے سے ایک ایسے وقت میں پرہیز کی جا رہی ہے جب خود اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل انٹونیوگیوٹرس کی جانب سے پیش کی جانے والی رپورٹ میں بچوں کے خلاف صیہونی جرائم پر روشنی ڈالی اور اسرائیلی جرائم کی مذمت کی گئی ہے۔

یہ بھی پڑھیں : امریکہ نے اسرائیلی جرائم کے خلاف سلامتی کونسل کی کارکردگی کو غیر موثر بنادیا ہے۔ ایران

اقوام متحدہ میں فلسطین کے مستقل نمائندے ریاض منصور نے کہا کہ غاصب صیہونی حکومت کی جانب سے بچوں کے خلاف ہونے والے جرائم پر اقوام متحدہ کی چشم پوشی بچوں کو قتل و زخمی کرنے اور انہیں غیر انسانی صورتحال میں قید رکھ کر بنیادی حقوق سے محروم کر دینے کے جرائم پر غاصب صیہونی حکومت کی حوصلہ افزائی کا باعث ہے۔

واضح رہے کہ اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل انٹونیوگیوٹرس کی جانب سے ورجینیا گیمبا کو غاصب صیہونی حکومت اسرائیل کے ہاتھوں فلسطینی بچوں کی قتل پر تحقیق کرنے کے لئے اقوام متحدہ کے خصوصی نمائندے کے طور پر مقبوضہ فلسطین (اسرائیل) بھیج دیا گیا ہے۔

خیال رہے کہ سلامتی کونسل کا یہ اجلاس فلسطین کی صورتحال بالخصوص مغربی کنارے کے بعض علاقوں کو مقبوضہ علاقوں میں شامل کرنے والے صیہونی منصوبے کا جائزہ لینے کے لئے بلایا گیا تھا۔

ٹیگز

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close