کاپی رائٹ کی وجہ سے آپ یہ مواد کاپی نہیں کر سکتے۔
یمن

سعودی جارحیت اور یمنی فوج کے جوابی حملے

جارح سعودی اتحاد کے فوجیوں نے صوبہ الحدیدہ کے علاقے الحالی میں عام شہریوں کے گھروں اور مکانات کو ہلکے اور بھاری ہتھیاروں سے نشانہ بنایا ہے جس کے نتیجے میں ایک کم سن بچہ شہید اور متعدد لوگ زخمی ہوئے ہیں۔صوبہ ضالع کے رہائشی علاقے قعطبہ پر سعودی اتحاد کی گولہ باری میں بھی متعدد یمنی شہری شہید اور زخمی ہوئے ہیں۔ مقامی ذرائع کا کہنا ہے کہ اس حملے میں دو رہائشی مکانات مکمل طور پر تباہ ہوگئے اور کم سے آٹھ یمنی شہری شہید اور زخمی ہوئے ہیں جن میں زیادہ تر بچے اور خواتین شامل ہیں۔سعودی اتحاد کے فوجیوں نے جمعے کے روز بھی یمن کے صوبے الحدیدہ کے شہر الدریھمی کے نواحی دیہات پر بھی گولہ باری کی تھی جس میں پانچ رہائشی مکانات زمین بوس ہوگئے تھے۔سعودی اتحاد کی جارحیت کے جواب میں یمنی فوج اور عوامی رضاکار فورس کے جوانوں نے سعودی عرب کے جنوبی صوبے نجران کے علاقے طیبہ الاسم میں سعودی فوج کی ایک ٹولی کو میزائل حملے کا نشانہ بنایا ہے۔ بتایا جاتا ہے کہ اس حملے میں متعدد سعودی اور سعودی اتحاد میں شامل کرائے کے فوجی ہلاک اور زخمی ہوئے ہیں۔ایک اور اطلاع کے مطابق یمنی فوج اور عوامی رضاکار فورس کے جوانوں نے نجران کے السدیس سیکٹر کی جانب سے سعودی اتحاد کی پیشقدمی کو بھی ناکام بنادیا ہے۔دوسری جانب یمن کی عوامی تحریک انصاراللہ نے الدریھمی میں جاری انسانی المیے پر عالمی حلقوں کی خاموشی کو مجرنامہ قرار دیتے ہوئے اس کی شدید الفاظ میں مذمت کی ہے۔یمنی ذرائع نے بتایا ہے کہ صوبہ الحدیدہ کے شہر الدریھمی میں بھوک اور دوائیں نہ ملنے کے سبب پانچ خواتین اور ایک بوڑھا شخص شہید ہوگیا ہے۔یمن کو غذائی اشیا اور دواؤں کی قلت کا ایسے وقت میں سامنا کرنا پڑ رھا ہے جب گزشتہ سال دسمبر میں سعودی عرب کے حمایت یافتہ وفد اور یمنی حکومت کے درمیان اسٹاک ہوم میں ہونے والے سمجھوتے کے تحت الحدیدہ میں مکمل جنگ بندی پر اتفاق کیا گیا تھا تاکہ اقوام متحدہ اور دیگر عالمی ادارے لاکھوں یمنیوں کی ضرورت کی اشیا پہنچاسکیں لیکن اس وقت سے آج تک جارح سعودی اور امارتی اتحاد روزانہ الحدیدہ کے بین الاقوامی ہوائی اڈے پر بمباری کر رہا ہے۔یمن کی وزارت صحت کے جاری کردہ اعداد و شمار کے مطابق بیس لاکھ یمنی بچے غذائی قلت کا شکار ہیں جن میں سے چار لاکھ بچوں کو موت کا خطرہ لاحق ہے۔

ٹیگز
Show More

متعلقہ مضامین

Back to top button
Close